کنیکٹوٹی لیب

کنیکٹوٹی لیب

Facebook میں کنیکٹوٹی لیب دنیا بھر کی کمیونٹیز میں سستے انٹرنیٹ تک رسائی کو ممکن بنانے کے طریقے تیار کر رہی ہے۔ یہ ٹیم کئی مختلف تکنیکیں دریافت کر رہی ہے، جس میں زیادہ اونچائی، طویل المیعاد استحکام والے ہوائی جہاز، سیٹلائٹ اور لیزر شامل ہیں۔

Aquila خودکار طیارہ

60،000 فٹ کی بلندی پر پرواز بھرکے Aquila خود کار طیارہ دنیا کو مربوط کرنے کے لئے ایک مختلف راستہ اختیار کر رہا ہے۔ اس کے بے دُم ڈیزائن اور پروں کے وسیع پھیلاؤ سے یہ بہت ہی آسانی سے پرواز کرتا ہے جبکہ اس کے سولر سیل اور بہت-ہی تدبیرانہ موٹر سے یہ مہینوں ہوا میں رہ کر زمین کے کچھ سب سے زیادہ دور دراز علاقوں میں انٹرنیٹ تقسیم کرتا ہے۔

لیزرز کے ساتھ مربوط ہونا

Aquila کی وسعت کی وجہ سے ہم تیز رفتار انٹرنیٹ فراہم کرنے نئے طریقے تلاش کرنے کی پوری کوشش کر رہے ہیں۔ لہذا ہم انسانوں کے ڈیٹا منتقل کرنے ابتدائی طریقوں میں سے ایک روشنی کا پھر سے استعمال کرنے لگے ہیں۔ فی سیکنڈ لاکھوں کروڑوں بار جھلملانے والی غیر مرئی انفراریڈ لیزر بیم اب بہت کم پاور کا استعمال کرتے ہوئے فائبر-آپٹک رفتار پر ڈیٹا بھیج سکتا ہے۔ لیزر ٹیکنالوجی کا استعمال کر کے ہم Aquila طیارے کے مکمل گروپ کو شامل کر سکتے ہیں اور انٹرنیٹ فراہم کر سکتے ہیں۔

بالکل نئے چیلنجز

دنیا کے کچھ معروف ایرو اسپیس انجینئر انٹرنیٹ تقسیم کرنے کے ہر مفروضے کو چیلنج دینے کے لئے کام کر رہے ہیں۔ ایلومینیم سے ہلکا اور اسٹیل سے 3 گنا زیادہ مضبوط کاربن فابر تلاش کرنا۔ لیزر کو اتنا درست بنانا کہ وہ 12 میل کے فاصلے سے بھی مناسب طریقے سے کام کر سکیں۔ اور تقریبا درجہ حرارت کے ‎200° کے اتار چڑھاؤ کے لئے مناسب بنانا۔